داؤن لود کریں
0 / 0
755928/01/2002

بغير وضوء اذان اور اقامت كہنے كا حكم

سوال: 20411

كيا بغير وضوء اذان اوراقامت كہنا صحيح ہے ؟

اللہ کی حمد، اور رسول اللہ اور ان کے پریوار پر سلام اور برکت ہو۔

وضوء كے بغير اذان اور اقامت كہنا
صحيح ہے، ليكن افضل يہ ہے كہ مؤذن اور اقامت كہنے والا شخص باوضوء ہو، اور اسى طرح
اس كى نماز بھى صحيح ہے، چاہے مؤذن اور اقامت بغير وضوء كے ہى ہو.

اور اگر مؤذن اور اقامت كہنے والا
شخص بغير وضوء كے ہى نماز ادا كرتا ہے تو دوسرے لوگوں كى طرح وہ بھى نماز لوٹائے
گا.

اللہ تعالى ہى توفيق دينے والا ہے.
اھ.

ماخذ

ماخوذ از: مجموع فتاوى و مقالات متنوعہ فضيلۃ الشيخ ابن باز رحمہ اللہ ( 10 / 338 )

at email

ایمیل سروس میں سبسکرائب کریں

ویب سائٹ کی جانب سے تازہ ترین امور ایمیل پر وصول کرنے کیلیے ڈاک لسٹ میں شامل ہوں

phone

سلام سوال و جواب ایپ

مواد تک رفتار اور بغیر انٹرنیٹ کے گھومنے کی صلاحیت

download iosdownload android
at email

ایمیل سروس میں سبسکرائب کریں

ویب سائٹ کی جانب سے تازہ ترین امور ایمیل پر وصول کرنے کیلیے ڈاک لسٹ میں شامل ہوں

phone

سلام سوال و جواب ایپ

مواد تک رفتار اور بغیر انٹرنیٹ کے گھومنے کی صلاحیت

download iosdownload android