داؤن لود کریں
0 / 0
789607/02/2002

عورت كے اذان اور اقامت كہنے كا حكم

سوال: 26332

اگر عورت گھر ميں اكيلى، يا عورتوں كى جماعت كے ساتھ نماز ادا كرے تو كيا وہ اذان اور اقامت كہے گى ؟

اللہ کی حمد، اور رسول اللہ اور ان کے پریوار پر سلام اور برکت ہو۔

علماء كرام كے صحيح قول كے مطابق اس پر يہ واجب نہيں، اور نہ ہى اس كے ليے مشروع ہے، كيونكہ يہ ايسا كام ہے جو رسول كريم صلى اللہ عليہ و سلم كے دور سے نہ تو عورت نے يہ كام كيا، اور نہ ہى اس كى ذمہ دارى اسے دى گئى، اور نہ ہى خلفاء راشدين رضى اللہ تعالى عنہم كے دور ميں.

اللہ تعالى ہى توفيق دينے والا ہے.

ماخذ

ديكھيں: فتاوى اللجنۃ الدائمۃ والبحوث الاسلاميۃ والافتاء ( 6 / 82 - 83)

at email

ایمیل سروس میں سبسکرائب کریں

ویب سائٹ کی جانب سے تازہ ترین امور ایمیل پر وصول کرنے کیلیے ڈاک لسٹ میں شامل ہوں

phone

سلام سوال و جواب ایپ

مواد تک رفتار اور بغیر انٹرنیٹ کے گھومنے کی صلاحیت

download iosdownload android
at email

ایمیل سروس میں سبسکرائب کریں

ویب سائٹ کی جانب سے تازہ ترین امور ایمیل پر وصول کرنے کیلیے ڈاک لسٹ میں شامل ہوں

phone

سلام سوال و جواب ایپ

مواد تک رفتار اور بغیر انٹرنیٹ کے گھومنے کی صلاحیت

download iosdownload android